دل جگر میرا وطن
میرا گھر میرا وطن

یہ جہاں اک سیر گاہ
مستقر میرا وطن

عالمِ اقوام میں
معتبر میرا وطن

خوب اوطانِ دگر
خوب تر میرا وطن

فرو ظلمت یاس کی
اک سحر میرا وطن

وادیء ایمن سا ہے
سربسر میرا وطن

منزلیں وہ سامنے
راہ پر میرا وطن

چاند تارے ہیں جہاں
وہ نگر میرا وطن

بہرِ پروازِ فلک
بال و پر میرا وطن

ہر نفر بے مثل ہے
دیدہ ور میرا وطن

سر اُٹھا کر سب جئیں
خود نگر میرا وطن

حشر تک یارب رہے
اوج پر میرا وطن

Advertisements