جہاں میں روکشِ باغِ عدن ہے پاکستان
بہارِ حسن کی دائم پھبن ہے پاکستان
مشاطگی کاعجب بانکپن ہے پاکستان
نظیر جس کی نہیں، وہ چمن ہے پاکستان
مجھے ہے فخر کہ میرا وطن ہے پاکستان

یہ وہ زمین ہے جس سے فلک کے ناتے ہیں
یہیں پہ ہست کے سب رنگ مسکراتے ہیں
اِسی کی خاک میں سورج اگائے جاتے ہیں
دیارِخوب کی گویا لگن ہے پاکستان
مجھے ہے فخر کہ میرا وطن ہے پاکستان

یہ پاک دھرتی توسجدہ گہِ زمانہ ہے
نمود ہو کہ وجود اس کا، معجزانہ ہے
اسی کے نام تب و تابِ جاودانہ ہے
ابد کی لوح پہ لکھا سخن ہے پاکستان
مجھے ہے فخر کہ میرا وطن ہے پاکستان

لبوں پہ گیت اسی کی محبتوں کے رہیں
نظر میں سلسلے روشن مسافتوں کے رہیں
لہو میں زمزمے ہر دم عزیمتوں کے رہیں
مری رگوں میں بھی اب موجزن ہے پاکستاں
مجھے ہے فخر کہ میرا وطن ہے پاکستان