اِس قدر دیکھا نہیں کرتے نگاہِ رحم سے
اِس قدر سمجھا نہیں کرتے ہیں کچھوے کو حقیر

دیکھ لینا گورنمنٹ کے ہاتھ جب بھی لگ گیا
پانی و بجلی کا بن جانا ہے اِس نے بھی وزیر

Advertisements