یہ رہا وہ پیڑ جس کو کاٹنے کا حکم ہے
ہاں مگر گرمی سے اپنا حال پتلا ہے بہت
کیوں نہ تھوڑی دیر کو سستالیں اس کی چھاؤں میں

Advertisements