گُلکاریاں انٹر نیشنل اُردو اَدبی فورم کے تحت ہونے والے 57 ویں انٹرنیشنل ہفتہ وارفی البدیہہ طرحٰی مُشاعرے بتاریخ ۲۱ دسمبر ۲۰۱۳ کے لئے میری کاوش

تم بھی دیکھو بیویوں کا سُوئے شوہر دیکھنا
جیسے قُربانی کی خاطر ڈھور ڈنگر دیکھنا

گُل رُخوں نے کھیڑا چھڈنا ہی نہیں عشاق کا
آج بھی پورس کے پیچھے ہے سکندر دیکھنا

ہندسہ ہم کو بنا کر رکھ دیا ہے چار کا
پاؤں پھیلانے سے پہلے اپنی چادر دیکھنا

ہائے کس اندار کے معیار ہیں اپنے یہاں
کون کس کو لگ رہا ہے کیسے سوبر دیکھنا

انقلاب اور منترِ جمہوریت سے ۔۔۔۔ ہاہاہا
آپ یہ سرسوں ہتھیلی پر جما کر دیکھنا

کس کی مضبوطی نے دے رکھی ہیں اُس کو پھرتیاں
جھولتا ہے کون سی ٹہنی سے بندر دیکھنا

نعمتِ باری کی ناشکری نہیں دعوت میں کیا؟
ضعف معدہ دیکھنا یا اپنی شوگر دیکھنا

یاد کرنا کیسے اوروں کی اُڑائی تھی ہنسی
آئینے کے سامنے جب کوئی جوکر دیکھنا

عشق سسٹر نرس کا طرفہ تماشہ ہے ظفر
اُس کا دلبر جان بھی کہتا ہے سسٹر دیکھنا

Advertisements