تیرا کلمہ چلے گا دنیا میں
اب یہ سکہ چلے گا دنیا میں

جب قدم تیرے راستے پہ اُٹھے
ساتھ عقبٰی چلے گا دنیا میں

جو رگوں میں لہو کو دوڑا دے
وہی نعرہ چلے گا دنیا میں

رُکنے والا رُکا رہے گا کہیں
چلنے والا چلے گا دنیا میں

تیرے گستاخ مٹتے جائیں گے
نام لیوا چلے گا دنیا میں

گرد ہو جائیں گی سبھی راہیں
تیرا اسوہٰ چلے گا دنیا میں

بچ نہ پائیں گے تل ابیب و روم
بس مدینہ چلے گا دنیا میں

Advertisements