(صوفی غلام مصطفٰی تبسم کی غزل کی پیروڈی )

وہ مجھ سے ہوئے ہمکلام اللہ اللہ
کہاں میں کہاں ٹنڈو جام اللہ اللہ

یہ بچوں کی چوں چوں ‘ یہ بیگم کی چاں چاں
یہ ہنگامۀ صبح و شام اللہ اللہ

یہ حلوے کی تابانیوں کا تسلسل
یہ ذوقِ شکم کا دوام اللہ اللہ

وہ جھینپا ہوا اِک میاں کا تبسم
وہ گھر میں کسی کے دھڑام اللہ اللہ

مرا گھر ‘ مری سیلری مختصر سی
وہ سسرال کا اژدھام اللہ اللہ

وہ بزمِ سخن میں ٹماٹر کی بارش
ظفر کا وہ لطفِ کلام اللہ اللہ

Advertisements